82

معروف سرجن پروفیسر کا ایک اور کارنامہ، خاتون کو نئی زندگی مل گئی

لاہور: (الشامی نیوز) ہیں وہی لوگ جہاں اچھے آتے ہیں جو کام دوسروں کے، سرجن نے چودہ سال سے بستر پر پڑی مریضہ کی مفت سرجری کرتے ہوئے انسانی ہمدردی کی اعلیٰ مثال قائم کردی۔

تفصیلات کے مطابق سرجن پروفیسر معاذ الحسن نے دو سو کلو گرام وزن رکھنے والی غریب خاتون کی مفت سرجری کردی، پینسٹھ سالہ رشیدہ نامی بزرگ خاتون چودہ سال سے وزن میں زیادتی کے باعث بستر پر پڑی تھی۔

سرجن پروفیسر معاذ الحسن نے بتایا کہ سرجن پروفیسر معاذ الحسن نے غریب خاتون کی مفت سرجری کردی گئی ہے، جس کے بعد اب وہ چلنے پھرنے کے قابل ہوجائیں گی اور ان کا وزن دو سو سے کم ہوکر ایک سو دس کلو ہوجائے گا۔

انسانی ہمدردی کی اعلیٰ مثال قائم کرنے والے سرجن پروفیسر معاذ الحسن نے بتایا کہ بیریاٹرک سرجری پر بیس لاکھ روپے کا خرچ آتا ہے، معاذالحسن کا کہنا تھا کہ کسی اذیت میں مبتلا شخص کی مدد کرنا ہم ڈاکٹرز کا فرض ہے۔

رشیدہ بی بی نے بتایا کہ میں ایک اسکول ٹیچر تھی جب مجھے موٹاپے کا مرض لاحق ہوا، میں گذشتہ چودہ سال سے بستر پر اذیت بھری زندگی گزار رہی تھی، سرجن پروفیسر معاذ الحسن میرے لئے فرشتہ بن کر آئے، ڈاکٹر معاذ نے میری سرجری کے تمام تر اخراجات برداشت کئے، جس پر میں ان کے بے حد شکر گزار ہوں۔

ڈاکٹر معاذ الحسن اس سے قبل بھی اس طرح کے متعدد آپریشن کرچکے ہیں جو کامیاب رہے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں