57

مہنگائی کرنے والوں کی لسٹیں تیار، 12 دن بعد زمین آسمان کا فرق نظر آئے گا‘ باخبر ذرائع

بہت بڑے بڑے لوگوں پر ہاتھ پڑنے لگا ہے ، سامنے صرف ٹائیگر فورس ہے در حقیقت 3 اداروں کو ڈیوٹی سونپی گئی ، تین روز میں بہت سارا مال پکڑاجانا بھی ان ہی اداروں کی کارروائی کا نتیجہ ہے، پاکستان کے اداروں نے فیصلہ کرلیا کہ اس مہنگائی اور مافیاکو کنٹرول کریں گے ، با خبر ذرائع کےانکشافات

’مہنگائی کرنے والوں کی لسٹیں تیار،  12 دن بعد زمین آسمان کا فرق نظر آئے ..

اسلام آباد (اُالشامی نیوز) مہنگائی کے خلاف آپریشن میں سامنے صرف ٹائیگر فورس ہے در حقیقت 3 اداروں کو ڈیوٹی سونپی گئی ہے جنہوں نے اپنی ابتدائی رپورٹس بھی مرتب کرلی ہیں، جس میں نشاندہی کی گئی ہے کہ اچانک چیزیں مارکیٹ سے کس طرح غائب ہوگئیں؟ اچانک ان کی قیمتیں کیسے بڑھ گئیں؟ ایک چیز موجود ہونے کے باوجود نہیں ملتی، اگر کوئی چیز وافر مقددار میں بھی موجود ہو تو اچانک اسے غائب کردیا جاتا ہے، کون انتظامیہ اور حکومت کوناکام کر رہا ہے، اس بارے میں جو رپورٹس آئی ہیں ان میں بہت خوفناک انکشافات کیے گئے ہیں،۔

)تفصیلات کے مطابق با خبر ذرائع نے انکشاف کیا کہ اداروں کی رپورٹس میں پاکستان کے بڑے بڑے بزنس ٹائیکونز کے نام سامنے آئے ہیں، جن کے مختلف سیاسی جماعتوں سے رابطوں کی معلومات بھی ملی ہیں، جن سے یہ بھی معلوم ہوا کہ کون کس کے کہنے پر ملک میں مصنوعی قلت پیدا کررہا ہے ، جب ان کے نام سامنے آئیں گے تو پاکستان کی بزنس کمیونٹی کی تاریخ کا بہت خوفناک سلسلہ ہوگا
گزشتہ تین روز میں بہت سارا مال پکڑاجانا بھی ان ہی تین اداروں کی کارروائی کا نتیجہ ہے، کیوں کہ تائیگر فورس والے سی آئی اے میں تو کام نہیں کرتے، اس سارے معاملے میں کوئی ہے جو پیچھے رہ کر کام کررہا ہے، کیوں کہ پاکستان کے اداروں نے فیصلہ کرلیا ہے کہ وہ اس مہنگائی اور مافیاکو کنٹرول کریں گے، آج سے 12دن بعد زمین آسمان کا فرق نظر آجائے گا، کیوں کہ بہت بڑے بڑے لوگوں پر ہاتھ پڑنے لگا ہے، ان کا چاہے حکومت سے تعلق ہو یا وہ کسی اور سیاسی جماعت سے ہوں،چاہت کسی بڑے بزنس گروپ سے تعلق رکتے ہوں،سب گرفتار ہوں گے، ان کی لسٹیں تیار ہوچکیں، جن کی بنیاد پر گرفتاریاں عمل میں لائی جائیں گی، اس سلسلے میں 4 بڑے بیوروکریٹس کے خلاف بھی اگلے ایک ہفتے میں کارروائی ہوجائے گی، جن پر سب سے بڑا الزام یہ ہوگا کہ انہوں نے ذخیرہ اندوزوں اور مہنگائی مافیا کو سپورٹ کی حکومت کو فعال کرنے میں مخالفین کے ساتھ رابطے میں ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں