64

اگر فضل الرحمان 15دن دھرنا دے دیں توسیاست چھوڑ دوں گا : وزیر اعظم

اسلام آباد:(الشامی نیوز ) وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پوزیشن کے جلسوں سے کوئی خوف نہیں، یہ دو چار جلسے کر کے تھک جائیں گے، اگر مولا نا فضل الرحمان 15دن دھرنا دے دیں توسیاست چھوڑ دوں گا ۔
جی این این کے مطابق تحریک انصاف اور اتحادی جماعتوں کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت ہوا ۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اپوزیشن بیروزگار ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسے اہمیت دینے کی ضرورت نہیں ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ مہنگائی پر جلد قابو پالیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملکی مسائل کے ذمہ دار سابق حکمران ہیں۔ حکومت مخالف تحریک کے تذکرے پر وزیراعظم کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کے جلسوں سے کوئی خوف نہیں، جو آج جلسے کر رہے ہیں انہوں نے ہی ملک کا بیڑہ غرق کیا ، یہ دو چار جلسے کر کےتھک جائیں گے، کہا کہ اپوزیشن کو جلسوں اور دھرنوں کا تجربہ نہیں، اگر مولا نا فضل الرحمان 15دن دھرنا دے دیں توسیاست چھوڑ دوں گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ لوگ کرپشن اور لوٹی ہوئی دولت بچانے کے لیے نکلے ہیں۔دوسری جانب پارلیمانی پارٹی اجلاس کی اندرونی کہانی سامنےآگئی، اجلاس میں مہنگائی اور اپوزیشن کی تحریک کا تذکرہ رہا ، رکن اسمبلی ثنااللہ مستی خیل نے حکومتی کارکردگیپر کڑی تنقید کی اور کہا کہ حکومت اورعوام کے حالات بہتر ہوتے نظر نہیں آ رہے ۔عوام بجلی اور گیس کے بل دینے کےقابل بھی نہیں رہے ۔وزیراعظم صاحب آپ کی ساری ٹیم ناکام ہو چکی ہے ۔جس پر وزیر اعظم نے کہا کہ ملکی حالات ہماری وجہ سے خرا ب نہیں ہوئے ۔کرونا کے باعث دنیا بھر میں اشیا مہنگی ہوئی ہیں ۔اس موقع پر نور عالم خان نے کہا کہ ٹیم میں کمزوریاں ہیں لیکن مشکلوقت میں ہم آپ کے ساتھ کھڑے ہیں ۔وزیراعظم نے گندم اور چینی کی قلت اور قیمتوں میں اضافے کاملبہ بیورکریسی پر ڈال دیا۔انہوں نے کہا کہ بیورو کریسی نے گندم اور چینی کے غلطاعدادو شمار بتائے۔جس کے باعث اشیاء کی قیمتیں بڑھیں اور بحران پیدا ہوا۔۔وزیراعظم کاکہنا تھا کہ حماد اظہر اور فخر امام کو ٹاسک دے دیا گندم اور چینی بحران پر قابوپا کر رہیں گے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں