77

پاکستان ڈیموکریٹک مومنٹ کا 11 اکتوبر کو کوئٹہ میں پہلے جلسے کا اعلان

اسلام آباد:(الشامی نیوز) پاکستان ڈیموکرٹیک مومنٹ (پی ڈی ایم) نے 11 اکتوبر کو کوئٹہ میں پہلا جلسہ منعقد کرنے کا اعلان کردیا۔اپوزیشن رہنماؤں نے کہا کہ اس تحریک سےحقیقی تبدیلی آئےگی۔
تفصیلات کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کی میزبانی میں آج پاکستان ڈیموکرٹیک مومنٹ کا اجلاس ہوا جس میںن لیگ کی طرف سے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی، احسن اقبال ،ایازصادق اور سعد رفیق شریک ہوئے ،جبکہ پیپلز پارٹی کے راجہ پرویز اشرف، نئیر بخاری اور شیری رحمان نے شرکت کی ، جمعیت علمائے اسلام ف کے مولانا عبدالغفور حیدری اور اکرم درانی بھی اجلاس میں شریک ہوئے ۔ اس کے علاوہ پاکستان ڈیموکرٹیک مومنٹ اجلاس میں جمعیت علمائے پاکستان کے شاہ اویس نورانی، عوامی نیشنل پارٹی کے میاں افتخار، پختونخوا ملی عوامی پارٹی کے عثمان کاکڑ اور جہانزیب جمالدینی اور دیگر رہنما ؤں نے بھی پی ڈی ایم کے اجلا س میں شرکت کی ۔ذرائع کے مطابق اجلاس میں قائد حزب اختلاف قومی اسمبلی شہباز شریف کی گرفتاری سے پیدا ہونے والی صورتحال سمیت دیگر رہنماؤں کے خلاف حکومتی سیاسی انتقامی کارروائیوں پر غور کیا گیا ، اجلاس میں آل پارٹیز کانفرنس سے منظورکردہ قرارداد پر عملدرآمد کے پلان کو حتمی شکل دینے پر بھی مشاورت ہوئی ، اس کے علاوہ گلگت بلتستان اور بلدیاتی انتخابات میں دھاندلی کے مقابلے کیلئےحکمت عملی پر غور کیا گیا۔پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ نے گیارہ اکتوبر کو پہلا جلسہ کوئٹہ میں کرنے کا اعلان کردیا۔ احتجاجی تحریک کی حکمت عملی کے لیے سٹیرنگ کمیٹی قائم کردی ۔ احسن اقبال سٹیرنگ کمیٹی کے سربراہ ہیں اور ہر جماعت سے دو دو نمائندے شامل ہوں گے۔ سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کہتے ہیں غیر جمہوری عمل سے ملک کو نجات دلائیں گے۔ اس تحریک کے ساتھ حقیقی سیاسی تبدیلی رونما ہوگی۔ چاروں صوبائی دارالحکومتوں میں بڑے جلسے ہوں گے۔اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ 11 اکتوبرکو پی ڈی ایم کا کوئٹہ میں پہلا جلسہ ہوگا۔انہوں نے کہا کہ تمام جماعتیں اجلاس کے فیصلوں پر متفق ہیں۔اس تحریک سےحقیقی تبدیلی آئے گی۔ آج ملک میں جمہوریت کو خطرہ ہے۔شاہدخاقان عباسی نے کہا کہ پی ڈی ایم اجلاس میں اپوزیشن رہنما شہباز شریف کی گرفتاری کی مذمت کی گئی۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کے رہنما راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ اجلاس میں اپوزیشن لیڈر کی گرفتاری پر افسوس کا اظہار کیا گیا۔ اس طرح کے ہتھکنڈوں سے جمہوریت کمزور ہوگی۔راجہ پرویزاشرف نے کہا کہ اپوزیشن رہنماوَں کی گرفتاری سےمتعلق وزرا آئے دن بیانات دیتے ہیں۔ وزراکے بیانات سے نیب کی آزادانہ پوزیشن پر بھی سوالات اٹھتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ 11 اکتوبر کو کوئٹہ میں عظیم الشان جلسہ منعقدکریں گے۔ پی ڈی ایم کے ذریعےجلسوں کی سیریز ہوگی۔ حکومت نے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ نہیں کیا۔ مہنگائی نےعوام کوپریشان کردیاہے۔ اپوزیشن کی تمام جماعتیں عوام کےساتھ ہیں۔ احسن اقبال پی ڈی ایم اسٹیئرنگ کمیٹی کےکنوینرہونگے۔ کنوینر تبدیل ہوتے رہیں گے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں