142

تجاوزات بھی شہر کا اصل مسئلہ ہیں، وزیراعلیٰ سندھ

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ تجاوزات بھی شہر کا اصل مسئلہ ہیں ،جن کی باقاعدہ اجازت دی گئی ۔

وزیراعلیٰ سندھ نے شہر میں شدید بارشوں کے بعد اور یوم عاشورہ کےموقع پر کراچی کا فضائی دورہ کیا اور امن و امان کی صورتحال پر اطمینان کا اظہار کیا ۔

دورے کےد وران وزیراعلیٰ سندھ کو جدید سیکیورٹی فیچرز کے بارے میں  آگاہی فراہم کی گئی۔

سید مراد علی شاہ نے کہاکہ صبح جلوس کے راستے پر چند مقامات پر پانی تھا، جسے صاف کیا گیا، شہر بھر کے 90 فیصد سے زائد علاقوں سے پانی نکال دیا گیا ہے، اب بھی ڈیفنس ، ٹاور اور سرجانی کے چند مقامات پر پانی موجود ہے۔

انہوں نےکہاکہ کراچی میں نالوں کے اندر تعمیرات کی اجازت دی گئی ،جب ان تعمیرات کے خلاف لوگ عدالت گئے تو ججز نے کہا کہ اختیار دینا اتھارٹیز کا حق ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے مزید کہا کہ میں اب کئی کئی منزلہ عمارتیں گرا تو نہیں سکتا،بارش کا ایک اور اسپیل بھی آرہا ہے ،دعا ہے کہ وہ خطرناک ثابت نہ ہو۔

ان کا کہنا تھاکہ وفاقی حکومت سے رابطے میں ہیں، امید ہے وفاقی حکومت مدد کرے گی، اسی طرح مدد کی جائے جس طرح بولٹن مارکیٹ آگ کے بعد سابق صدر آصف زرداری نے کی تھی۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ کے الیکٹرک کو کہا ہے کہ وہ اپنا انفرااسٹرکچر بہتر کریں ،اگر 24 سے 26 سب اسٹیشنز میں پانی جمع ہے تو ان کے باہر چھوٹے بند بنائیں۔

سید مراد علی شاہ نے کہا کہ کے الیکٹرک سےکہہ دیا کہ ایسی گاڑیاں لی جائیں جو اتنی بارش میں کام کرسکیں ،اصل خدشہ عملےکو کرنٹ لگنےکا ہوتا ہے تو اس پر کام کریں ۔

ان کا کہنا تھاکہ اب جو بارشیں ہوں گی اس کےلیے تیار رہنا پڑے گا، شہر کو ٹھیک کرنا ہے تو سب کو مل کر کام کرنا ہوگا،یہ صرف صوبائی اور وفاقی ادارے نہیں کرسکتے عالمی اداروں کو بھی مدد کرنا ہوگی۔

وزیراعلیٰ سندھ نے اس موقع پر ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی ہے کہ وہ متاثرین کا ڈیٹا اکٹھا کریں ۔

یاد رہےکہ سندھ حکومت پہلے ہی صوبائی دارلحکومت کراچی کو آفت زدہ قرار دے چکی ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں