49

حکومت کا نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن قائم کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد:سانحہ موٹر وے کے بعد وزیراعظم عمران خان نے نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن قائم کرنےکا فیصلہ کر لیا جس کے لیے وزیر اعظم عمران خان نے پی ایم ڈلیوری یونٹ کو اہم ٹاسک سونپ دیا۔
ترجمان کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی ہدایت پر پی ایم ڈلیوری یونٹ نے نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن پر کام کا آغاز کر دیا ہے اور نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن کے لیے الگ نظام تشکیل دیا جائے گا جس کے تحت کسی بھی ایمرجنسی کی صورتحال میں پورے ملک کے لیے ایک ایمرجنسی ہیلپ لائن نمبر ہو گا، کسی بھی ایمرجنسی کی صورت میں عوام کو ایک مخصوص نمبر میسرہو گا،وزیر اعظم عمران خان نے نیشنل ہیلپ لائن نمبر کے قیام کو دو ماہ میں مکمل کرنے کی ہدایت کی ہے۔ترجمان وزیر اعظم آفس کا کہنا تھا کہ ملک کے تمام ایمرجنسی ہیلپ لائن نمبرز کو نئے نظام سے منسلک کیا جائے گا اور نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن نمبر ٹول فری ہو گا،نئے سسٹم میں جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کیا جائے گا،ملک کی تمام موبائل کمپنیوں سے معاونت حاصل کی جائے گی،نیشنل ہیلپ لائن نمبر سے کسی بھی ناگہانی صورت میں شہری کی فوری مدد ممکن ہو گی،نظام کو موثر اور مستحکم بنانے کے لیے قانون سازی کی جائے گی جبکہ قانون سازی کے لیے صوبوں سے بھی مشاورت ہو گی۔

یاد رہے کہ تھانہ گجرپورہ پولیس کے مطابق موٹر وے خاتون  بچوں کے ہمراہ لاہور سے گوجرانوالہ جارہی تھی۔ راستے میں پٹرول ختم ہوا تو خاتون نے گاڑی کھڑی کردی۔ اس دوران دو نامعلوم افراد آئے اور خاتون کو بچوں سمیت قریبی کھیتوں میں لے گئے۔ ملزمان نے بچوں کے سامنے خاتون کا زیادتی کا نشانہ بنایا اورنقدی لے کر فرار ہوگئے ۔پولیس نے ایک ملزم کو گرفتار کر لیا ہے تاہم مرکزی ملزم عابد تاحال پولیس کی گرفت سے باہر ہے۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں