47

جب سے پاکستان بنا ہے قبائلی علاقوں میں خوشحالی نہیں آئی وزیر اعظم عمران خان

مہمند:(الشامی نیوز) وہزیراعظم عمران خان نے ناحقئی سرنگ اورشیخ زید روڈکا افتتاح کردیا ، اس موقع پر وزیراعظم کا کہنا تھا کہ قبائلی علاقوں‌کی ترقی کیلئے زیادہ سے زیادہ فنڈز خرچ کریں‌گے ۔
تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خا ن نے افتتاحی تقریب میں عمائدین سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ حکومت کا جو نظریہ ہوتا ہے وہی اس کا روڈ میپ ہوتا ہے اور ہمارا نظریہ وہ اصول ہے جو مدینہ کی ریاست کے اصول تھے ۔وہ نظریہ یہ تھا کہ کمزورطبقوں کو اوپر لانا ہے ۔ علامہ اقبال اورقائد اعظم کی سوچ بھی ایسی ہی فلاحی ریاست کی تھی ۔انہوں نے کہا کہ این ایف سی ایوارڈ میں صوبوں نے تین فیصد دینے کا وعدہ کیا تھا لیکن کے پی کے علاوہ کسی نے اپنا وعدہ پورا نہیں کیا ۔ باقی صوبے کہہ رہے ہیں ان کے پاس پہلے ہی پیسے نہیں ہیں ، کوروناکی وجہ سے پیسہ کم اکٹھاہوا۔ وزیراعظم نے کہا کہ ترقی سب علاقوں کو اوپر اٹھانے کیلئے ہوتی ہے کسی ایک کو نہیں ، جو پارٹی اندرون سندھ سے آتی ہے اس نے کراچی کے لیے کچھ نہیں کیا اسی طرح پنجاب بھی ایسا ہی تھا صرف ایک شہر کواٹھایا گیا باقی کو ویسے ہی چھوڑ دیا گیا۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ کوشش ہے بلوچستان اورقبائلی علاقوں کوفنڈز ملنے چاہئیں، فنانس منسٹری کوکہاہے قبائلی علاقوں کوفنڈزدیں، دشمن نہیں چاہتے قبائلی علاقوں کاانضمام ہو، دشمن کی کوشش ہے قبائلی علاقوں کے انضمام میں رکاوٹیں ڈالی جائیں۔ انسداداسمگلنگ کیلئے پاک افغان سرحد پر باڑلگ گئی، بارڈر مارکیٹ کھولنے کی تیاری کی جارہی ہے، افغانستان میں امن مذاکرات شروع ہوگئے، ایسے ملک موجودہیں جو نہیں چاہتے افغانستان میں امن ہو، جب سے پاکستان بناہے قبائلی علاقے میں خوشحالی نہیں آئی. وزیراعظم نے کہا کہ تجارت کی وجہ سے قبائلی علاقوں میں ترقی ہوگی، سب سے زیادہ غربت قبائلی علاقوں میں ہے۔ لیکن   ہم پوری کوشش کریں گے کہ زیادہ سے زیادہ فنڈز قبائلی علاقوں پر خرچ کریں  ۔بعدازاں وزیراعظم عمران خان نے باجوڑکا بھی دورہ کیا جہاں انہوں نے تیمرگرہ، خار ، مامدگٹ روڈ کا سنگ بنیاد رکھ دیا ، اس موقع پر آرمی چیف ، وزیراعلی ٰ کے پی کے اور گونر کے پی بھی  وزیراعظم کے ہمراہ موجود تھے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں