68

،ہم کسی صورت میں اپنی زمین کا ایک بھی ٹکڑا غیر آئینی طریقے سے لینے نہیں دیں گے بلاول بھٹو

کراچی (الشامی نیوز) تفصیلات کے مطابق چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو کا پریس کانفرنس میں کہنا تھا کہ قائد کے مزار پر کراچی میں پی ڈی ایم کا جلسہ کریں گے ، ملک کی جمہوری جماعتیں ملکر اس نااہل حکومت کو ختم کر دیں گے، ہم سب ایک پلیٹ فارم سے اس سلیکٹڈ حکومت کیخلاف آواز بلند کریں گے،ہمیں اپنا جمہوریت واپس چاہیے ہے ،آج ہماری عوام مشکلات کا سامنا کر رہے ہیں ،ہم اس لیے ناکام ہو رہے ہیں کیونکہ ایک نالائق حکمران اس عہدہ پر بیٹھا ہے ،اس میں صلاحیت نہیں کہ یہ کام کر سکے ۔بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ اس حکومت نے تازہ حملہ جو سندھ پر کیا ہے اس پر سخت مذہمت کرتے ہیں ،کوئی یہ برداشت نہیں کر سکتا کہ رات کے اندھیرے میں ہمارے صوبہ پر قبضہ کرنے کی کوشش کرے ،مطالبہ کرتے ہیں کہ غیر قانونی آرڈیننس واپس لو،کل آپ عمر دین ، خیر پور کو ایسا قبضہ کر لیں گے ،ایک کرکٹر کو وزیرا عظم بناتے ہو تو آپ کو پتہ نہیں ایسی چھوٹی چیزوں سے صوبہ کو کیا نقصان ہو سکتا ہے ،ہم کسی صورت میں اپنی زمین کا ایک بھی ٹکڑا غیر آئینی طریقے سے لینے نہیں دیں گے ،یہ غیر جمہوری رویہ ہے ،آپ اپنے مخالفین کے بغض میں انتقامی سیاست پر اتر جاتے ہو،اب عوام آپ کو بوجھ برداشت نہیں کر سکتے ،عوام آپ کا ظلم اب برداشت نہیں کر سکتے ،صوبے کی عوام کو گیس فراہم نہیں کی جا رہی جو اس کا بنیادی حق ہے ،آٹے ، چینی اور ضروری اشیا کی قیمتیں دیکھیں بجلی کی قیمتوں میں اضافہ ہو رہا ہے ،ہر صوبہ میں اس نالائق حکومت کی وجہ سے نقصان ہو رہا ہے ،ہم نے پہلے دن سے اس حکومت کیخلاف آواز اٹھائی ہے اور آج تک قائم ہیں ،ہمیں جمہوری نظام لانا ہو گا ،جمہوری نظام میں عوام کی بات سنی جاتی ہے ،ہمارے انٹرویو کو سینسر کر دیا جاتا ہے ،جلسہ جلوسوں پر آتے ہیں آپ انتقامی سلوک شروع کر دیتے ہیں ،اب ان کی گنتی شروع ہو چکی ہے ،اپنا آرڈیننس واپس لو میں ان سے ملوں گا بھی نہیں ،ہم کسی بھی غیر آئینی انداز میں بات ہی شروع نہیں کر سکتے ،آپ نے آرڈیننس کے تحت ہمارے آئی لینڈز پر قبضہ کرنے کی کوشش کی ،آئی لینڈز پر ماہی گیر رہتے ہیں آپ نے ان سے پوچھنا ہے کہ وہ کیا کرنا چاہتے ہیں ،سارے ماہی گیر سراپہ احتجاج ہیں ،اس حالات میں حکومت کیساتھ کسی صورت بات نہیں کر سکتے ،کسی کو اندازہ نہیں تھا یہ حکومت اس طرح کی حرکت کر سکتا ہے ،عمران خان کو اپنی سیاسی بیان کو درست کام کرنا چاہیے۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ آپ نے کرپشن نہیں کی تو انویسٹیگیشن سے کیوں بھاگ رہے ہو ،پشاور میٹرو کی بسیں خود باخود جل رہی ہیں اس پر نیب کو کارروائی نہیں کرنے دے رہے ،جہانگیر ترین لندن میں مزے کر رہا ہے اس کے حساب کا کیا ہوا،ابراج گروپ جو کے الیکٹرک میری عوام کا خون چوس رہا ہے اس کا احتساب ہوا ،عمران خان خود کہتا تھا کہ مہنگائی بڑھتی ہے تو وزیر اعظم کرپٹ ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں