116

کراچی: قائد آباد میں لوگوں نے رات چھتوں پر گزاری

کراچی (الشامی نیوز) شدید بارشوں کے نتیجے میں سکھن ندی کا بند ٹوٹنے سے قائد آباد کے اطراف کئی آبادیاں زیرآب آگئیں، جبکہ قائدآباد کے اطراف میں ندی کے پانی کا ریلہ تاحال گزر رہا ہے، علاقے کے لوگوں نے رات چھتوں پر گزاری۔

یار محمد گوٹھ، مدینہ ٹائون، شفیع گوٹھ سمیت اطراف کے علاقے ڈوب گئے، جس کے باعث لوگ، خواتین اور بچوں سمیت اپنے مکانوں کی چھتوں پر محصور ہو گئے۔

پانی کے ریلے میں کئی گاڑیاں اور موٹرسائیکلیں بھی بہہ گئیں، اس صورتِ حال کے باعث ایئر پورٹ سے قائد آباد تک ٹریفک کی روانی بھی متاثر ہوئی ہے۔

ابراہیم گارڈن، ماروی گوٹھ، مدینہ کالونی، گلشنِ عباس، آفریدی کالونی اور یار محمد گوٹھ میں سیکڑوں گھرپانی میں ڈوبے ہوئے ہیں۔

بعض علاقوں میں سات سات فٹ تک پانی جمع ہوگیا ہے اور پانی کی سطح مسلسل بڑھ رہی ہے۔

شہریوں نےرات چھتوں پر گزاری جبکہ پاک فوج، نیوی اور رینجرز کے اہلکاروں نے درجنوں افراد کو ریسکیو کرلیا ہے۔

سندھ کے صوبائی وزیر سعید غنی نے کہا ہے کہ دو جانب سے بند ٹوٹنے کے سبب ملیر میں کافی مسئلہ ہے، کوشش ہے کہ بند کی فوری مرمت کی جائے۔

’الشامی نیوز سے بات کرتے ہوئے سعید غنی کا کہنا تھا کہ بند کی مرمت کے لیے پاک فوج بھی مدد کر رہی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں