26

نیب کو ہدف تنقید بنانے سے کچھ حاصل نہیں ہوگا، چیئرمین نیب

ویب ڈیسک 19 مئی 2021

اسلام آباد: (الشامی نیوز آن لائن نیوز)چیئرمین نیب نے ادارے کو ہدف بنانے والے عناصر کو آئینہ دکھاتے ہوئے کہا کہ بلاجواز تنقید کرنے والےشاندار کارکردگی اور نیب آرڈیننس ضرور پڑھیں تاکہ اصل حقائق سے آگاہی حاصل ہو سکے۔

تفصیلات کے مطابق چیئرمین نیب کی زیرصدارت قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس ہوا، جہاں شرکا سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال نے کہا کہ ملک سے بدعنوانی کا خاتمہ اور کرپشن فری پاکستان اولین ترجیح ہے ہم “احتساب سب کے لیے” کی پالیسی پر قانون کے مطابق عمل پیرا ہیں۔

چیئرمین نیب نے ایک بار پھر واضح کیا کہ نیب انسداد بدعنوانی کا قومی ادارہ ہے،تعلق کسی سیاسی جماعت گروہ سےنہیں ہے، نیب کا تعلق صرف اور صرف ریاست پاکستان سے ہے، نیب ملزمان کو قانون کے مطابق منطقی انجام تک پہنچانے کے لئے کو شاں ہے، نیب اور پاکستان ساتھ ساتھ چل سکتے ہیں مگرنیب اور کرپشن ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے۔

چیئرمین نیب کا کہنا تھا کہ نیب نے اپنے قیام سے اب تک 790 ارب روپے قومی خزانےمیں جمع کرائے جبکہ گذشتہ تین سالوں میں 87ارب قومی خزانے میں جمع کرائے، 1269ریفرنسز احتساب عدالتوں میں دائر کر رکھےہیں

اجلاس میں شرکا سے گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین نیب نے واضح الفاظ میں کہا کہ بلاجواز تنقید کرنے والےشاندار کارکردگی اور نیب آرڈیننس ضرور پڑھیں تاکہ اصل حقائق سے آگاہی حاصل ہو سکے، نیب نے ٹھوس شواہد کی بنیاد پر ریفرنسز دائر کیےہیں، نیب کو ہدف تنقید بنانے سے کچھ حاصل نہیں ہوگا، نیب کے بارے میں کسی بھی خبر سے پہلےپہلے نیب کا مؤقف ضرور لیا جائے، نیب سےمؤقف لیناادارے کا آئینی اور قانونی حق ہے۔

چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال کا مزید کہنا تھا کہ نیب ہمیشہ آئین اور قانون کے مطابق فرائض کی انجام دہی پریقین رکھتاہے، غیر قانونی سوسائٹیز اور مضاربہ اسیکنڈلز سے رقوم واپسی کےلیےکوشاں ہیں، نیب کی کارکردگی کو معتبر قومی اور بین الا قوامی اداروں نے سراہا، ٹرانسپرنسی انٹر نیشنل پاکستان، پلڈاٹ اور مثعال پاکستان نے سراہا جو اعزاز ہے۔

اس سے قبل نیب ایگزیکٹو بورڈ کے اجلا س میں تین ریفرنسز کی منظوری دی گئی، سابق سینئر رکن بور ڈ آف ریونیو کے پی احسان اللہ محسود کےخلاف ریفرنس کی منظوری دی گئی، احسان اللہ محسود پر ڈی آئی خان میں 1976کنال کی غیرقانونی الاٹمنٹ کاالزام ہے سابق ضلعی ناظم مقبول لہڑی ، سابق مئیر کوئٹہ کلیم اللہ اوردیگر کےخلاف ریفرنس کی منظوری دی گئی ملزمان کی خوردبردسےقومی خزانےکو529ملین روپے کا نقصان پہنچا۔

اس کے علاوہ سابق وزیر ایکسائز امین عمرانی اور دیگر کے خلاف ریفرنس دائر کرنے کی منظوری بھی دی گئی، ملزم پر اختیارات کےناجائزاستعمال اورآمدن سے زائد اثاثے بنانے کا الزام ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں