53

شوگر انکوائری سے پہلے 2 تحقیقاتی یونٹس نے جہانگیر ترین کی جاسوسی کی

اسلام آباد ( الشامی نیوز) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کےرہنما جہانگیر خان ترین کے قریبی ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ شوگر انکوائری سے پہلے حکومت کے دو تحقیقاتی یونٹس نے جہانگیر خان ترین، اُن کے خاندان اور کاروبار کے بارے میں جاسوسی کی، جس کے بعد ان کے خلاف کارروائی شروع کی گئی۔

جہانگیر ترین کے قریبی ذرائع نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان کے ارد گرد ایسے لوگ ہیں جنہوں نے عمران خان اور پی ٹی آئی کے سابق جنرل سیکریٹری جہانگیر ترین کے درمیان غلط فہمیاں پیدا کرنے کی کوشش کی، جس کی وجہ سے معاملات خراب ہوئے۔

معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر نے رابطہ کرنے پر حیرت کا اظہار کیا اور کہا کہ انکوائری کمیشن کی رپورٹ کے بعد نامزد افراد سپریم کورٹ گئے لیکن وہاں اپنا کیس ثابت نہیں کرسکے، انکوائری کمیشن اپنا کام جاری رکھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں