57

سرکاری ملازم کی کروڑوں روپے مبینہ کرپشن کا انکشاف

کوئٹہ: (الشامی نیوز) قومی احتساب بیورو (نیب) کے ترجمان کا کہنا ہے کہ سرکاری ملازم کی کروڑوں روپے مبینہ کرپشن کا انکشاف ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان نیب کا کہنا ہے کہ کوئٹہ میں سرکاری ملزم کی کروڑوں روپے مبینہ کرپشن سامنے آئی ہے، محکمہ تعمیرات کے سپرنٹنڈنٹ انجینئر کے 25 کروڑ روپے کے غیرقانونی اثاثے ہیں۔

ترجمان نیب کے مطابق غیرقانونی اثاثہ جات میں کوئٹہ، کراچی میں بنگلے، 6 فلیٹ شامل ہیں، ملزم نور لہڑی اور بے نامی دار ملک نوید کے خلاف ریفرنس احتساب عدالت میں دائر کردیا گیا۔

نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ بے نامی داروں کے نام پر اکاؤنٹس سے 132 ملین روپے کی مشتبہ ٹرانزیکشن کا انکشاف ہوا ہے، قبل ازیں ملزم کی بے بنیاد درخواست کو چیف جسٹس ہائیکورٹ نے مسترد کردیا تھا۔

ترجمان نیب کے مطابق نیب نے سپرنٹنڈنٹ انجینئر نور لہڑی، بے نامی دار ملک نوید کاسی کے خلاف ریفرنس دائر کردیا، گرفتاری سے بچنے کے لیے ملزم نے عدالت سے عبوری ضمانت حاصل کررکھی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ نئےعزم واستقلال کیساتھ بدعنوانی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنےکیلئے پرعزم ہیں، نیب افسران بدعنوانی کےخاتمہ کو قومی فرض سمجھ کرادا کررہے ہیں، نیب ملک کو کرپشن فری بنانے کےمشن کی تکمیل کیلئے بھرپورمحنت کررہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ افسران محنت، عزم، شفافیت اورمیرٹ پر فرائض انجام دے رہے ہیں، نیب کی آگاہی مہم کو ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل، پلڈاٹ جیسے اداروں نےسراہا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں