68

کیا سیلیکون سے بنے برش بالوں کی جلد کے لئے موزوں ہیں؟

اسلام آباد (الشامی نیوز )بالو ں کی دیکھ بھال کی طرح سر کی جلد کی دیکھ بھال بھی اتنی ہی اہمیت کی حامل ہوتی ہے لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ سر کے لیے خصوصی برش کا استعمال کرنا آپ کے بالوں کے لئے کتنا سود مند ثابت ہوسکتا ہے؟

اگرچہ سر ہمارے جسم کی 3.5حصہ بنتا ہے لیکن ہم عام طور اسے بھول جاتے ہیں ہم بالوں کی حفاظت کے دوران بھول جاتے ہیں کہ سر کی جلد کی حفاظت سے بال بھی محفوظ رہیں گے،سر کی جلد میں کچھ ایسے اجزا شامل ہوتے ہیں جو بالوں کو تیار کرتے ہیں، یہ کیریٹین تیار کرتے ہیں جو بالوں کو مضبوط کرتے ہیں۔

سر کی جلد کے لئے خصوصی حفاظت

الربیعہ میں شائع ہونے والی ایک تحقیق کے مطابق سر کی جلد کے خلیوں کی تخلیق جلد کے خلیوں کی تخلیق سے دو گنا تیز ہوتی ہے اور یہی وجہ ہے کہ وہ  آلودگی ، الٹرا وائلٹ شعاعوں، بالوں کے لئے استعمال کئے جانے والے ہیئر کلر یا سخت بالوں کی اسٹائلنگ کے نتیجے میں عدم توازن کا شکار ہو جاتی ہے۔

بالوں کی جلد کی دیکھ بھال سے متعلق تحقیق کرنے والے ماہرین اس بارے میں کہتے ہیں کہ سر  کی جلد کو بیرونی عناصر سے جتنا ہوسکے بچائیں، اس کے لئےوہ ہفتے میں کئی بار باقاعدگی سے مساج کی ترغیب دیتے ہیں۔

سر کی جلد کے ماہرین مشورہ دیتے ہیں کہ سر کی جلد کے مساج کے لیے ایک خاص برش کا استعمال کرنا چاہیے، یہ برش ایک سے زیادہ لچکدار سروں اور گول دانتوں پر مشتمل ہوتا ہے، یہ خون کی گردش کو تیز بناتا ہے اور بالوں کے پتیوں میں غذائی اجزا کی تقسیم کو یقینی بناتا ہے، اس کے علاوہ یہ مساج ٹوٹنے والے، پتلا ہونے والے بالوں کو مضبوط کرنے میں مدد دیتاہے جو غیر فطری زوال کا شکار ہوتے ہیں۔ا ایک تحقیق کے مطابق کچھ قسم کے برش جو سر کی جلد کی دیکھ بھال کے لیے استعمال کیے جاتے ہیں ان کا اچھا اثر بھی پڑتا ہے کیونکہ یہ نہ صرف خون کی گردش کو تیز کرتے ہیں بلکہ اس کی سطح پر جمع ہونے والے فاسد مادوں کو سر کی جلد سے دور کرنے کے لئے بھی کام کرتے ہیں

سر کی جلد کے برش کا طریقہ استعمال

الربیعہ میں شائع ہونے والی ایک تحقیق کے مطابق زیادہ تر برش ایک ہی وقت میں سر کی جلد کا مساج اور بالوں کو چھڑانے کا کام کرتے ہیں، یہ عموماً روزانہ استعمال ہوتے ہیں۔ البتہ صرف مساج کے لیے تیارکردہ یا پلاسٹک اور سلیکون سے بنے ہوں تووہ ہفتے میں ایک یا دو بار استعمال کرتے چاہیے۔

غسل کرنے کے بعد بالوں پر تیل لگاکر مساج کا برش استعمال کیا جا سکتا ہے، یا شیمپو سے بالوں کو دھوتے وقت اسی طرح مالش کے دوران بھی استعمال کیا جا  سکتا ہے، جو سر کی جلد کے باریک سوراخوں میں جمع زہریلے مواد کو نکالنے کا کام کرتا ہے اور انہیں بہتر طور پر بڑھنے کا موقع دیتا ہے۔

عام طور پر بالوں کی نشوونما کے لیے ضروری غذائی اجزاء اور آکسیجن خون کی گردش سے حاصل کرتے ہیں، جہاں تک سر کی جلد میں غدود کا تعلق ہے تو یہ بالوں میں موجود ریشہ بڑھاتے اور ان کو زیادہ چمکدار بناتے ہیں، یوں صحت مند بالوں میں ہر ماہ ڈیڑھ سینٹی میٹر تک اضافہ ہوتا ہے اور ان کی زندگی چلتی رہتی ہے۔

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں