113

گزشتہ دو ماہ میں تین لاکھ موٹر سائیکل فروخت

پاکستان میں گاڑیوں اور موٹر سائیکلوں کی فروخت میں ریکارڈ اضافہ

پاکستان میں گاڑیوں اور موٹر سائیکلوں کی فروخت میں اضافہ ہورہا ہے، ستمبر کے مہینے میں  گزشتہ برس کی نسبت  گاڑیوں کی فروخت میں 18 فیصد جبکہ موٹر سائیکلوں کی  فروخت میں بھی ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔

پاکستان آٹو موٹیو ایسوسی ایشن (پاما) کے مطابق  ستمبر 2020 میں گزشتہ برس ستمبر کی نسبت گاڑیوں کی فروخت میں 18 فیصد اضافہ ہوا،  گاڑیاں بنانے والی کمپنیوں نے اس ایک ماہ  کے دوران 13892 یونٹس فروخت کیے جبکہ گزشتہ سال ستمبر 2019 میں  11678 یونٹس فروخت ہوئے تھے۔

کورونا بحران کے خاتمے کے بعد گاڑیوں اور موٹر سائیکلوں کی مانگ میں اضافہ دیکھا جارہا ہے،  اعداد وشمار کے مطابق  رواں مالی سال کے دوران اب  تک گاڑیوں کے 31868 یونٹس فروخت کیے گئے جو کہ گزشتہ برس کے اس عرصے سے2.7 فیصد زیادہ ہے۔

اسی طرح  دیہی علاقوں میں موٹرسائیکل کی مانگ بڑھنے سے  رواں مالی سال کے ابتدائی تین ماہ میں موٹرسائیکلوں کی فروخت میں زبردست اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

پاکستان موٹر سائیکل اسمبلرز(اے پی ایم اے) کے چیئر مین  محمد صابر شیخ کے مطابق  رواں مالی سال کے تین ماہ میں موٹر سائیکلوں کے 8 لاکھ5ہزار408 یونٹس فروخت ہوئے ہیں۔

محمد صابر کے مطابق  2020 کے شروع سے موٹر سائیکل مارکیٹ مندی کا شکار رہی، جنوری اور فروری میں فروخت نہ ہونے کے برابر جبکہ مارچ سے مئی تک فروخت بالکل بند رہی  ،  کورونا وائرس کے لاک ڈاؤن کے خاتمے کے بعد جولائی کے مہینے میں موٹر سائیکلوں کی فروخت نے ایک ماہ میں فروخت ہونے والی موٹرسائیکلوں کے گزشتہ تمام ریکارڈ توڑ ڈالے ، اس مہینے میں  3 لاکھ موٹر سائیکلیں  فروخت ہوئیں۔

محمد صابر کے مطابق دیہی علاقوں میں موٹر سائیکلوں کی مانگ بڑھی ہے، ملک میں صرف ہنڈا کمپنی نے تین ماہ کے دوران2 لاکھ 88 ہزار سے زائد موٹر سائیکلیں فروخت کیں ۔

موٹر سائیکلوں کی فروخت میں  اضافے کی بڑی وجہ ملک میں ہوم ڈیلوری اور رائیڈر سروس کے رجحان  میں اضافہ بھی ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں